ad

Live

پولیس اہلکاروں نے خاتون کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنادیا


کراچی پولیس اہلکاروں کا نیا کارنامہ منظر عام پر آگیا، دو پولیس اہلکاروں کا دوستوں کے ساتھ نارتھ کراچی کی رہائشی شادی شدہ خاتون سے اسلحہ کے زور پر گینگ ریپ۔

تفصیلات کے مطابق خواجہ اجمیر نگری کے علاقے نارتھ کراچی سیکٹر 4 کی رہائشی (ک) سے دو پولیس اہلکاروں سمیت 6 ملزمان نے خاتون کے گھر میں گھس کر زیادتی کی، پولیس نے خاتون کی درخواست پر مقدمہ الزام نمبر315/19 درج کرلیا

متاثرہ خاتون ک کی جانب سے درج کرائی جانیوالی ایف آئی ارکے متن کے مطابق نامعلوم افراد نے میرے گھر کے دروازے پر دستک ہوئی، میں نے دروازہ کھولا تو کچھ لوگ زبردستی میرے گھر میں گھس گئے، جن میں سے دو ملزمان کے نام کامران ملک اور سرفراز ہیں۔

سرفراز اور اس کے ساتھیوں نے میرے ساتھ جنسی زیادتی کی اور ویڈیو بھی بنائی ، جبکہ کامران نامی ملزم نے میرا موبائل نمبر اپنے موبائل میں سیو کیا اور کہا کہ رابطے میں رہنا۔ تمام ملزمان نے جاتے ہوئے مجھے دھمکی دی کہ اگر تم نے کسی کو کچھ بتایا تو نقصان ہوگا،

ملزمان کے جانے کے بعد کامران نے مجھے فون اور میسج کئے، ملزمان کو گھر میں داخل ہوتے فرسٹ فلور پر رہائش پذیر خاتون نے بھی دیکھا دوپہر دو بجے جب میرا شوہر گھر آیا تو ساری صورتحال بتائی اور اب شوہر کے ساتھ ان چھ افراد کے خلاف رپورٹ کرانے تھانے آئی ہوں۔

اطلاعات کے مطابق گرفتار ملزم دانش ایس پی گڈاپ کے ساتھ ڈیوٹی سرانجام دیتا ہے، جبکہ ملزم سرفراز ماضی میں بھی دو بار ڈکیتی اور قتل کے الزام میں جیل کی ہوا کھا چکا ہے، آج کل اس کی ڈیوٹی ہیڈ کوارٹر میں تھی،

  • جبکہ دیگر ملزمان میں کامران، لیاقت، رضوان اور نعیم شامل ہیں۔تاہم خواجہ اجمیرنگری پولیس کی جانب سے متاثرہ خاتون کی مدعیت میں مقدمہ نمبر 315/2019 درج کرلیاگیا۔


Add Comment

Click here to post a comment